Ibn-e-Insha Urdu Poets

Chodhween ki Raat – Designed Shayari of Ibn-e-Insha

Poetry and Prose by “Ibn-e-Insha”

Ghazal in Urdu Font by Ibne Insha

کل چودھيں

کل چودھيں کي رات تھي، شب بھر رہا چرچا تيرا
کچھ نے کہا يہ چاند ہے، کچھ نہ کہا چہرا تيرا

ہم بھي وہيں موجود تھے ہم سے بھئي سب پوچھا کيے
ہم ہنس دئيے ہم چپ رہے، منظور تھا پردہ تيرا

اس شہر ميں کس سے مليں، ہم سے چھوٹيں محفليں
ہر شخص تيرا نام لے، ہر شخص ديوانہ تيرا

دو اشک جانے کس لئے، پلکوں پہ آکر ٹک گئے
الطاف کي بارش تيري، اکرام کا دريا تيرا

ہم پر يہ سختي کي نظر ہم ہيھں فقير رہگور
رستہ کبھي روکا تيرا دامن کبھي تھاما تيرا

ہاں ہاں تري صورت حسين ليکن تو ايسا بھي نہيں
اس شخص کے اشعار سے شہرہ ہوا کيا کيا تيرا

بے درد سنني ہوتو چل کہتا ہے کيا اچھي منزل
عاشق تيرا، رسوا تيرا، شاعر تيرا، انشا تيرا


2 Comments

Leave a Comment